حق

بہت دن سے وہ اپنے شوہر کی بے اعتنائی برداشت کررہی تھی،بات صرف نظر انداز کرنے ہی نہیں تھی،دوہفتے سے شوہر نے اپنا بستر بھی الگ کرلیا تھا،ایک عورت جو اپنے شوہر سے اپنی ذا ت کے لئے روٹی پانی،کپڑا لتے کے علاوہ بھی کچھ چاہتی ہے،پیار چاہتی ہے،توجہ چاہتی ہے،لیکن شوہر تو اپنی ہی ذات میں گم تھا،ہر وقت موبائل کی دُنیا میں مگن،اُوپر سے پردیس کا دکھ،پیچھے اپنا کوئی ایسا بھی نہ تھا جو اس بیچاری کو سہارا دیتا،اس کے آنسو پونچھتا،باپ گزر گیا اور ماں بھائی بھی نان شبینہ کے محتاج،ایسے میں لے دے کر ایک شوہر کاہی آسرابچا تھا،یا دو معصوم بچے،جاتی تو کہاں جاتی،ایسے میں تنگ آمد بجنگ آمد آج اُس نے ٹھان لی کہ شوہر سے دوٹوک بات کرے گئی،بچوں کے سکول جانے کے بعدوہ ڈرائنگ روم میں آئی جہاں صاحب بہادر روز کی طرح ہاتھ میں موبائل تھامے مصروف تھے،کہ وہ گویا ہوئی!
سنیں،
مجھے بات کرنی ہے آپ سے اور امید ہے آئند ہ میں دوبارہ یہ بات نہیں دہراؤں گی اس نے بیماری کی شدت سے بمشکل صوفے پر بیٹھتے ہوئے کہا
ہاں بولو،موبائل کی سکرین پر نظر جمائے جواب آیا
کیا مجھے دوائی کے پیسے مل سکتے ہیں؟ میری طبیعت دن بدن بگڑتی جا رہی ہے بچوں کو میری ضرورت ہے ورنہ یہ رُل جائیں گے وہ سالوں سے کسی پیچیدہ بیماری کا شکار تھی جو کچھ عرصے سے اسکے جسم سے خون نچوڑ رہی تھی
نہیں میرے پاس پیسے نہیں ابھی
تو پھر جاب کر لینے دیں میں خود اپنا علاج کر وا لیتی ہوں آپ سے نہیں کہوں گی آئندہ
تجھے کہا نا نہیں کرنی جاب بچوں کو دیکھو میں رو ٹی پوری کر رہا ہوں نا اور چھت بھی ہے سر پر لوگوں سے پوچھو اپنے سے نیچے دیکھا کرو لوگ کس حال میں ہیں
آپ کی بات ٹھیک لیکن مجھے اب چکر آنے لگ گئے ہیں کھڑا نہیں ہوا جاتا کسی کام کو کرنے کو دل نہیں کرتا سستی اور غنودگی رہتی ہے مجھے کمزوری دن بدن محسوس ہو رہی ہے،کیا آپ کی کمائی پر میرا اتنا بھی حق نہیں کہ ڈاکٹر کے پاس جا سکوں اگر خود کرنا چاہتی ہوں کام تو بھی کرنے نہیں دیتے
تو بچے کون دیکھے گا؟
اس نے تلخ لہجے میں کہا
ایک اور بات پوچھنی تھی
ہاں اب کیا ہے؟
اکلاپے کی ماری سہمی ہوئی آواز میں بولی
قرآن پاک میں ہے کے بد چلن عورت کو اگر دیکھو تو اس سے اپنا بستر الگ کر لو سزا کے طور پر یہ سب سے بڑی سزا ہوتی ہے عورت کے لئے تو میں یہ پوچھنا چا ہ رہی تھی کے کیا آپ کے ساتھ بستر پر آپ کی بازو پر لیٹنے کا بھی میرا حق نہیں حالانکہ میں بد چلن نہیں تو آپ نے اپنا بستر مجھ سے کیوں علیحدہ کیا یا کوئی قصور ہے تو وہ بھی بتا دیں
وہ موبائل میں ٹائپنگ میں ایسا مصروف جیسے سنا ہی نا ہو
اب یہ موبائل چھوڑ کے میری بات کا جواب دے دیں سہیلیوں سے بعد میں بات کر لیں
بے غیرت عورت مجھ پر الزام لگاتی ہے؟اس نے آنکھیں دکھاتے ہوئے چیخ کہ کہا
سہمی ہوئی سوال کر تی آنکھوں میں آیا پانی بہہ نکلا،وہ سمٹ گئی
الزام؟
کیسا الزام میرے پاس تو ثبوت ہیں آپ کے گناہوں کے وہی تصویریں اور سکرین شارٹ جس میں آپ بہت ساری عورتوں کو اپنا مردانہ عضو دکھا رہے تھے اور وہ سب اپنی……؟ دکھاؤں آپکو؟
کتے کی بچی وہ بات پرانی ہو گئی ہے اب کی بات کر حرامی،جب اپنے اُوپر بات آئی تو منہ سے مغلظات بہنے لگیں
دیکھیں گالی مت دیں مجھے بھی آتا ہے گالی دینا لیکن میں آرام سے بات کررہی ہوں کیا آپ کے جسم پر میرا کوئی حق نہیں اور آپکا بستر الگ کس بات پر…..؟
تیری ما ں کی….. تیری بہن کی………. مجھ سے سوال جواب کرتی ہے؟ گالی مت دیں آرام سے بات کریں
گالی میں بھی دے سکتی ہوں اور آپ بھی اپنی ما ں کی وہاں………. سے نکل کے آئے ہیں، آپ میری ما ں کو بخش کراپنی ما ں کی ہی مار لیں برداشت کی حد ختم ہوتی جا رہی مجھ میں گالی کے علاوہ آتا بھی آپ کو کچھ؟
ما ں….. کیا چاہتی ہے؟
اپنا حق دوا دارو نان نفقہ جیب خرچ اور جنسی تسکین جو ایک شوہر کے علاوہ کوئی اور نہیں دے سکتا شریف عورت کو اگر نہیں دے سکتے یہ سب تو آپ باہر تو منہ مارتے ہی ہیں رہی سہی کسرفون سیکس سے پو ری کر لیتے ہیں یا تو مجھے بھی ایسا کرنے کی اجازت ہو یا پھر جائز طریقہ یہ تو زیادتی ہے جو آپ میرے ساتھ کرتے ہیں
آپ ایسا کریں مجھے کوئی حق مت دیں طلاق دے دیں بچے بھی رکھ لیں میرا خیال ہے آپ بچے بھی اچھے سے پال سکتے ہیں میں بھیک مانگ کے اپنا پیٹ پا لوں یا محنت کر کے آپ سے دوبارہ اپنا حق نہیں مانگوں گی آپ آزاد میرے وجود سے
کسی کتے کی بچی آہستہ بات کر لوگ سن لیں گے میری عزت کیوں خراب کرتی ہے،
سوال یہ ہے کہ ایسے مرد کی عزت بھی ہوتی ہے……….؟؟؟
بے حیا عورت تو برابری کرے گی میری تیرے جیسوں کو تو میں اپنے………. کے ساتھ باندھ کے گھماتا ہوں اپنی جانگوں کے درمیان رکھتا
ہوں تو مجھ جیسے مرد کے ساتھ برابری کرے گی؟ اورکمرہ زنا ٹے دار تھپڑ گونج اٹھا
حق کیسے ملے گا…..؟؟؟

اپنا تبصرہ بھیجیں